MAARIF RESEARCH JOURNAL

ISSN 2415-2315 (Online), ISSN 2221-2663 (Print)

خلاصہ: ذاتِ انسانی کی طرف جن اوصاف و اعراض کی نسبت و اسناد (predication) کی جاتی ہے، جیسے عمومی فضائل اور رذائل، ان میں اخلاقی صفات یا خصلتیں اپنا الگ درجہ رکھتی ہیں۔ بنیادی طور پر یہ دو قسم کی ہیں: صفاتِ محمودہ اور صفاتِ مذمومہ۔ یعنی اچھی یا لائقِ ستائش صفات، اور بُری یا لائقِ مذمت صفات۔ یہ تقسیم اپنے اپنے انداز میں عام انسانی طبیعت و فطرت اور دین و مذہب دونوںکے حکم و اقتضاء کی رو سے ہے۔ اور ہر ایک صفت و خصلت یا ’’لازم‘‘ کی صورت میں ہوتی ہے جو انفرادی زندگی سے متعلق ہوتی ہے، اور یا ’’متعدی‘‘ ہوتی ہے یعنی اجتماعی زندگی سے اس کا تعلق و ارتباط ہوتا ہے، اور یا لازم اور متعدی دونوں ہوتی ہے۔ ’’صفاتِ محمودہ‘‘ میںسے ایک ’’تحمل مزاجی‘‘ ہے جس پر یہاںاسلامی تعلیمات و ہدایات اور موجودہ عالمی فضاء کے حوالے سے روشنی ڈالنی مقصود ہے۔

read more

January 1st, 2011

Posted In: Issue 01, MAARIF RESEARCH JOURNAL

Tags:

One Comment